121

حکومتی اقدامات پر سختی سے عملدرآمد کرانے کا فیصلہ۔

وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کی زیر صدارت خصوصی اجلاس:
• پنجاب کی سیاسی و عسکری قیادت کا وباء کی روک تھام کیلئے حکومتی اقدامات پر سختی سے عملدرآمد کرانے کا فیصلہ۔
• کور کمانڈر لاہور لیفٹیننٹ کی جانب سے سول حکومت سے بھرپور تعاون جاری رکھنے کی یقین دہانی۔
• اجلاس میں فوڈ سکیورٹی اور فوڈ سپلائی چین کے حوالے سے اقدامات پر بھی غور کیا گیا۔
• پنجاب حکومت انسداد کورونا مہم کے دوران جاں بحق ہونے والے ملازمین،ڈاکٹروں اورہیلتھ پروفیشنلز کے لواحقین کو شہداء پیکیج کے تحت مراعات دے گی۔
• ایکشن پلان پر من و عن عملدرآمد پر اتفاق۔

“متاثرہ مریضوں سے قریبی رابطہ رکھنے والے افراد کو ٹریس کرنے کیلئے ایس او پیز مرتب کر لئے گئے ہیں۔ صوبے میں ٹیسٹنگ کیلئے نئی لیبز قائم کر رہے ہیں۔” وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بُزدار

• پنجاب واحد صوبہ ہے جہاں امتناع وبائی امراض آرڈیننس نافذ العمل ہوچکا ہے۔
• صوبے میں کورونا وباء کی تازہ صورتحال، حفاظتی اقدامات اور عوام کی زندگیوں کے تحفظ کیلئے کئے جانے والے اقدامات کا تفصیلی جائزہ لیا گیا۔
• کورونا وائرس سے متاثرہ مریضوں کے علاج معالجے میں مصروف ڈاکٹرزاورہیلتھ پروفیشنلزکو ایک ماہ کی اضافی تنخواہ دی جائے گی۔
• گندم کی نئی فصل کی کٹائی کا آغاز اپریل میں ہوگا۔
• پنجاب حکومت نے فلور ملوں کیلئے گندم کا کوٹہ بڑھا دیا۔
• خیبرپختونخوا کو بھی روزانہ کی بنیاد پر 5 ہزار میٹرک ٹن گندم دی جا رہی ہے۔
• کسانوں سے 1400 روپے من کے حساب سے گندم خریدی جائے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں